Articles

کرکٹ، سیاست اور غلاظت : مجیب الرحمان شامی

کرکٹ، سیاست اور غلاظت : مجیب الرحمان شامی

پی ایس ایل کا فائنل لاہور میں ہوا، اور اس شان سے ہوا کہ بد خبریاں اور بدشگونیاں بانٹنے والے اپنا سا مُنہ لے کر رہ گئے۔ کھسیانی بلی تو کھمبا نوچ لیتی ہے، لیکن کھیسانے بلّوں، بلکہ باگڑ بلّوں کے ہاتھ تو کوئی کھمبا بھی نہیں آ رہا تھا کہ وہ اس ہی پر غصہ نکال لیں۔ نتیجتاً انہوں نے اپنے آپ ہی کو نوچ لیا… ”چاند‘‘ نکلا تو ہم نے وحشت میں… جس کو دیکھا اسی کو ”نوچ‘‘ لیا۔ اِس سے قطع نظر کہ کس نے کیا کِیا اور کیا کہا، کس کو کیا کہنا چاہئے تھا، اور کیا نہیں کہنا چاہئے تھا، کیا کر گزرنا چاہئے تھا، اور کیا کرنے کا سوچنا بھی نہیں چاہئے تھا، بنیادی اور بڑی حقیقت یہی ہے کہ پاکستانی قوم نے اپنے آپ کو منوا لیا۔ قذافی سٹیڈیم میں پشاور اور کوئٹہ کی ٹیموں کے درمیان جو میچ کھیلا جا رہا تھا […]

آنے والا سونامی : خورشید ندیم

آنے والا سونامی : خورشید ندیم

بلاگرز کا قصہ ایک منفرد واقعہ نہیں۔ یہ آنے والے دور کی ایک دھندلی سی تصویر ہے۔کچھ وہ بھی ہیں جن پر اِس کی سحر بے حجاب ہے۔ سوشل میڈیا ابلاغ کی ایک نئی دنیا ہے۔ یہ ایک نیا چیلنج بھی ہے۔ یہ تہذیبی کشمکش کا نیا میدان ہے۔ فکر و نظرکی وہ بحث جو اس سے پہلے ابلاغ کے دوسرے ذرائع تک محدود تھی، اب یہاں منتقل ہو رہی ہے۔ اس فورم کا ایک پہلو یہ بھی ہے کہ اپنی شناخت کو مستور رکھتے ہوئے، وہ کچھ کہا جا سکتا ہے جو شناخت کے ساتھ کہنا مشکل ہے۔ ہر ایجاد دو دھاری تلوار ہے۔ یہ اگر اناڑیوں کے ہاتھ لگ جائے تو خیر پر شر غالب آ جا تا ہے۔ سوشل میڈیا کا معاملہ بھی کچھ ایسا ہی ہو گیا ہے۔اگر یہ انسانوں کے استعمال میں رہتا تو فکر و نظر کا اختلاف شاید فساد میں تبدیل نہ ہوتا۔ […]

یوپی معرکہ سر کرنے کے بعد مودی کی پالیسی کیا ہو گی

یوپی معرکہ سر کرنے کے بعد مودی کی پالیسی کیا ہو گی

بھارت ہمارا ہمسایہ تو ہے مگر ازلی دشمن بھی مانا جاتا ہے۔اس کی حکمران اشرافیہ کو دو قومی نظریے کی بنیاد پر پاکستان کا قیام آج تک ہضم نہیں ہوا ہے۔ ہماری سلامتی اور بقاءکو زک پہنچانے کا لہذا کوئی موقع وہ ہاتھ سے جانے نہیں دیتی۔ اسی بھارت کا مگر ایک بہت بڑا صوبہ ہے۔یوپی جس کا نام ہے۔کسی زمانے میں ”متحدہ صوبہ جات اودھ“ کہلاتا تھا،ان دنوں ”اترپردیش“ کا مخفف ہے۔ ا ٓبادی اس کی 22کروڑ تک پہنچ چکی ہے۔ برصغیر کے مسلمانوں میں اپنے لئے ایک جدا وطن حاصل کرنے کی خواہش1905میں تقسیم بنگال سے جڑے سیاسی قضیوں سے قبل،اسی خطے میں ”ہندی-اُردو تنازعہ“ کی وجہ سے ٹھوس صورتوں میں دُنیا کے سامنے آئی تھی۔ سرسید احمد خان نے اس خواہش کو علمی اور ثقافتی بنیادیں فراہم کرنے کے لئے علی گڑھ کو اپنا مرکز بنایا تھا۔اسی صوبے کے سہارن پور کا ایک جھوٹاسا قصبہ دیوبند بھی […]

نواز شریف کی تاریخی عدالتی فتح کے منظر نامے : رؤف کلاسرا

نواز شریف کی تاریخی عدالتی فتح کے منظر نامے : رؤف کلاسرا

پاناما سکینڈل کی سماعت مکمل ہوچکی‘ فیصلے کا انتظار ہے اور بڑی بے صبری سے۔ ہرجگہ یہی سوال زیربحث ہے‘ سب پوچھتے ہیں فیصلہ کب آئے گا اور کیا ہوگا؟ سننے میں آرہا ہے دس مارچ سے پہلے پہلے یا پھر مارچ کے آخری ہفتے میں فیصلہ آجائے گا ‘ اپریل تک معاملہ نہیں جائے گا۔ سوال وہی ہے فیصلہ کیا ہوگا؟ یقیناً عدالت کے ان پانچ معزز ججوں کو ہی پتہ ہوگا جو اس وقت فیصلہ لکھ رہے ہوں گے۔ البتہ عدالتی کارروائی کے دوران ججوں کے جو ریمارکس سننے میں آئے اور جو بوگس اور بیکار دلائل کا انبار شریف خاندان کے وکلاء نے لگایا اور عمرو عیار کی کہانیاں سنائی گئیں، اس سے تو ججمنٹ کا اندازہ لگانا کوئی مشکل نہیں۔ رہی سہی کسر نواز لیگ کے وزراء نے پوری کر دی جب انہوں نے کیس کو کمزورپا کر عدالت اورججوں پر چڑھائی شروع کر دی اور […]

لہو میں بھیگے ارض وطن کے دیوار و در: عبدالحنان چوہدری

لہو میں بھیگے ارض وطن کے دیوار و در: عبدالحنان چوہدری

دل مغموم ہے جگر چھلنی ہے روح گھائل ہے میں کس کے نام لکھوں جو شام وسحر میرے دیس کے باسیوں پہ بیت رہی ہے میرے شہر جل رہے ہیں میر ےلوگ مررہے ہیں سوچتا ہوں کب تک یہ آگ و خون کا کھیل میری دھرتی کی ماوں کا کلیجہ چھلنی کرتا رہیگا مورخ لکھے گا ایسی قوم بھی کبھی اس دھرتی پر آباد تھی جو ظلم پہ ظلم سہتی تھی لاشیں اٹھاتی تھی تعداد میں بھی زیادہ تھے جنگی سازوسامان بھی رکھتے تھے مذمتیں بھی کرتے تھے مگر پھر سب بھول جاتے تھے جب تک نیا سانحہ نہ ہوتا مال روڈ لاہور کا دل ہے کئی اہل سخن نے مال روڈ کی رومانویت جاذبیت اور خوبصورتی پر قلم سے روشنیاں بکھیری محبتوں کے دیپ روشن کئے گذشتہ دنوں اسی مال روڈ کی تارکول کی بنی سڑک کو خون سے سرخ کیا گیا حملہ آوار سینکڑوں لوگوں سے ہوتا ہوا […]

مادری زبانیں خطرے میں : اختر سردار چوہدری

مادری زبانیں خطرے میں : اختر سردار چوہدری

مادری زبان کی اہمیت کو اجاگر کرنے کے لیے عالمی ادارہ یونیسکو نے 1999ء میں 21 فروری کو مادری زبان کے حوالے سے باقاعدہ عالمی دن منانے کا اعلان کیا ،جو اب پوری دنیا میں اٹھارہ سال سے منایا جارہاہے ۔ اس دن مختلف تنظیمیں تقریبات کا اہتمام کرتی ہے ، عوام میں مادری زبانوں کی اہمیت اور تعلیمی افادیت کا شعور اجاگر کرنے کیلئے واک اور بینر ڈسپلے کرنے کا اہتمام کیا جاتا ہے۔ لیکن دیکھا گیا ہے کہ حکومتوں کو اس سے کوئی دلچسپی نہیں ہوتی ۔خالی دن منانے سے کیا ہو گا ۔بہت ساری زبانیں مسلسل دم توڑ رہی ہیں ۔جب تک حکومت ،اخبارات ،جرائد ورسائل ،اور خاص کر الیکٹرانک میڈیا مادری زبانوں کے تحفظ کے لیے بھر پور حصہ نہیں لیں گے، اس دن کو منانے کا کوئی نتیجہ نہیں نکلے گا ۔ اقوام متحدہ کے صدر دفاتر میں یونیسکو کی طرف سے تشکیل دیے گئے، […]

معروف محقق،اسلامی دانشور، بین الاقوامی قانون دان ڈاکٹر محمد حمید اللہ تحریر۔اختر سردار چودھری ،کسووال

معروف محقق،اسلامی دانشور، بین الاقوامی قانون دان ڈاکٹر محمد حمید اللہ تحریر۔اختر سردار چودھری ،کسووال

معروف محدث، فقیہ، قانون دان اور اسلامی دانشور ،تاریخ قرآن وحدیث کے محقق کو دنیا ڈاکٹر محمد حمید اللہ کے نام سے جانتی ہے ۔حیدرآباد دکن میں 9 فروری 1908 ء کو پیدا ہوئے ۔آپ آٹھ بہن بھائیوں میں سب سے چھوٹے تھے ۔ آپ کے والد محترم کا نام محمد خلیل اللہ تھا، جو خود بھی ایک ادیب اور عالم شخصیت تھے۔آپ کے دادا محمد صبغت اللہ کا شمار بھی عظیم علماء میں تھا، جنہوں نے67 کتابیں عربی ،فارسی ،اردو میں لکھی تھیں ۔ آپ نے گھر میں ابتدائی تعلیم حاصل کی اس کے بعد جامعہ نظامیہ میں داخلہ لیا اور 1924ء میں درس نظامی مکمل کیا ۔اس کے بعد امتیازی حیثیت سے میٹرک پاس کیا ۔1924ء میں آپ نے جامعہ عثمانیہ میں داخلہ لیا اور اسلام، علم قانون میں ایم اے اور ایل ایل بی کی سند 1930ء میں حاصل کی۔ 1932ء میں جامعہ بون، جرمنی سے ڈی […]

پھولوں کی داستان،سانحہ پشاور : اختر سردار چوہدری

پھولوں کی داستان،سانحہ پشاور : اختر سردار چوہدری

ملکی ہی نہیں انسانی تاریخ کے سیاہ ترین دن 16 دسمبر 2014ء کا سورج طلوع ہوا ۔ کسے کیا خبر تھی کہ یہ دن ملک کی تاریخ میں ایک اور سانحہ کے طور پر یاد رکھا جائے گا ،یہ سورج طلوع ہوا تو اپنے ساتھ ان گنت غم لے کر آیا، آرمی پبلک سکول پشاورپر دہشت گردوں کے حملے نے پشاور کی سرزمین کے حساس دلوں ،معصوم پھولوں کو خون میں رنگ دیا تھا۔پشاور کے آ رمی پبلک اسکول پر دہشتگردوں کے حملے میں شہید ہونے والے 144 طلبہ 22اساتذہ اور پاک فوج کے تین جوانوں کی شہادت کا واقعہ آج بھی قوم کے ذہن میں ہے اور اس کے زخم آج بھی اسی طرح تازہ ہیں۔ اس واقعہ کو دو سال ہو گئے لیکن ایسا لگتا ہے کہ جیسے کل ہی کی بات ہو ۔ ہر صاحب دل پاکستانی 16دسمبرکو سانحہ مشرقی پاکستان کا سوچ کر اشکبار ہوتا ہے […]

Vices of the western world

اب اُڑ جا رے پنچھی : تحریر سید امجد حسین بخاری

بخاری میری خاطر صرف ایک کش صرف ایک کش، تم اپنے دوست کی خاطر ایک کش نہیں لگاﺅ گے؟ یہ کلاس کی جانب سے کی جانے والی باربی کیو پارٹی میں میرے ایک بہت قریب دوست کے جملے تھے۔ ایک وقت کو میں نے سوچا کہ ایک کش لگانے میں کیا حرج ہے؟ کیا ہو جائے گا جو میں اپنے دوست کا دل رکھنے کے لئے ایک کش سگریٹ کا لے لوں ؟ لیکن پھر خیال آیا کہ یہ ایک کش ہی اس پرندے کی مانند ہوتا ہے جو اپنی پہلی اُڑان سے خوف زدہ ہوتا ہے مگر جوں ہی وہ اُڑنا شروع کرتا ہے تو اس کی پرواز بلند سے بلند تر ہوتی جاتی ہے۔ اکثر نوجوان اپنے دوستوں کی خاطر ہی نشے کی ابتدا ءکرتے ہیں اور یہ ابتدا رفتہ رفتہ ان کی زندگی کا حصہ بن جاتی ہے۔ زمانہ طالب علمی میں قریبی دوستوں ہی کی وجہ […]

پیغام رسالت کو سمجھنا اور سیرت طیبہ کو اپنانا ہی محبت ہے  : تحریر اختر سردار چوہدری

پیغام رسالت کو سمجھنا اور سیرت طیبہ کو اپنانا ہی محبت ہے : تحریر اختر سردار چوہدری

دنیا بھر میں اس وقت رسولِ رحمت صلی اللہ علیہ وسلم کا جشن میلادالنبی منایا جا رہا ہے ۔جلسے اور جلوس نکالے جا رہے ہیں، محفلیں سجائی جا رہی ہیں ۔ دل باغ با غ ہوگیا ،ویسے ہی مومن کی علامت ہی یہی ہے کہ آقاکی دنیا میں جلوہ گری کا ذکر ہو تو خوب خوشیاں منائی جائے ،پھر ایک خیال بھی ذہین میں آیا کہ ہم مسلمان اب نام کے مسلمان رہ گئے ہیں ۔ بلکہ نام کے بھی کہاں ہم نے تو اپنے اپنے مسلک ،مکتب کو اپنی پہچان بنا لیا ہے ۔حتی کہ مساجد پر بھی مسلک کے نام کی تختی لگا لی ہے ۔دل غم سے بوجھل ہو گیا ۔آج امت مسلمہ مشکل حالات سے گزررہی ہے ۔ ہم کو اس نقصان کا احساس بھی نہیں ہے ۔اسی سبب سے ہم ایک زوال زدہ قوم و امت بن چکے ہیں ۔ ہمارے مسلمان بھائی آپس میں […]

advertise